افغانستان پرئمیر لیگ میں پاکستانی کھلاڑیوں کو بھی مُختلف فرنچائزز نے مہنگے داموں خرید لیا ہے

افغانستان پرئمیر لیگ جو کہ 5 اکتوبر 2018 سے لیکر 21 اکتوبر 2018 تک مُتحدہ عرب امارات میں کھیلی جائے گی اور اس میں کُل پانچ ٹیمز حصہ لیں گی.اس لیگ کے لئے اب کھلاڑیوں کی ڈرافٹنگ کا عمل مُکمل ہو چُکا ہے جس میں 9 پاکستانی کھلاڑیوں کو بھی مُختلف فرنچائزز نے مہنگے داموں خرید لیا ہے.

اس ایونٹ میں سب سے مہنگے پاکستانی کھلاڑی دُنیائے کرکٹ کا بڑا نام شاہد خان آفریدی ہیں جن کو پکتیا کی فرنچائز نے 1 لاکھ ڈالرز کی عوض خریدا ہے.اور یہ اس ٹیم کے آئیکون کھلاڑی ہیں.

 

اسکے بعد پاکستانی فاسٹ باؤلر وہاب ریاض کو قندھار کی ٹیم نے ڈائمنڈ کیٹیگری میں 75000 ڈالرز کی عوض خریدا ہے.اسکے علاوہ قندھار کی ٹیم نے افتخار احمد کو بھی سلور کیٹیگری میں 30 ہزار ڈالر میں خریدا ہے.

اسکے علاوہ افغان پرئمیر لیگ کی فرنچائز بلخ نے تین پاکستانی کھلاڑیوں مُحمد عرفان،کامران اکمل اور مُحمد نواز کو خریدا ہے.فاسٹ باولر عرفان اور کامران اکمل کو اسی فرنچائز نے 30 ہزار ڈالر کے بدلے جبکہ مُحمد نواز کو 20 ہزار ڈالر کے بدلے خریدا ہے.

پاکستانی آل راؤنڈر سُہیل تنویر کو کابُل کی ٹیم نے 30 ہزار ڈالرز کے عوض جبکہ مُحمد حفیظ کو ننگرہار نے 30 ہزار ڈالرز کے عوض خرید لیا ہے.

نویں پاکستانی کھلاڑی جو کہ ڈرافٹنگ میں سلیکٹ کئے گئے ہیں وہ پاکستانی آل راؤنڈر فہیم اشرف ہں جنکو آفریدی کی فرنچائز پکتیا نے 30 ہزار ڈالرز کے عوض ڈائمنڈ کیٹگری میں خریدا ہے.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *